وثوق سے نہیں کہہ سکتے کہ کم جانگ ان زندہ ہیں یا مر گئے۔ ٹرمپ انتظامیہ

واشنگٹن (اردو ٹاؤن اخبار تازہ ترین۔ 21 اپریل 2020ء) شمالی کوریا کے صدر کم جانگ ان کی حالت تشویشناک، وثوق سے نہیں کہہ سکتے کہ کم جانگ ان زندہ ہیں یا مر گئے۔ تفصیلات کے مطابق شمالی کوریا کے سربراہ کم جانگ ان کے حوالے سے انتہائی تشویشناک خبر سامنے آئی ہے۔ امریکی میڈیا کے مطابق صدر کم جانگ ان کی حالت کارڈیوویسکولر سرجی کے بعد شدید خراب ہے۔
میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکی حکام شمالی کوریا کے سربراہ سے متعلق معلومات اکٹھی کرنے کی تگ و دو میں ہیں جن کی پچھلے ہفتے دل کی بیماری سے متعلق سرجری ہوئی اور وہ تشویشناک حالت میں مبتلا ہیں۔

خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی انتظامیہ کے ایک اہلکار نے شناخت ظاہر نہ کرنے کی شرط پر میڈیا کو بتایا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ وثوق سے نہیں کہہ سکتی کہ صدر کم جانگ ان زندہ ہیں یا ان کی موت واقع ہو چکی ہے۔

متفرق بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق صدر کم جانگ ان سرجری کے بعد انتہائی تشویشناک حالت میں مبتلا ہیں۔ برطانوی میڈیا کے مطابق موجودہ صورت حال پر جنوبی کوریا کی حکومت کا کہنا ہے کہ وہ سرجری کے بعد کم جانگ کی نازک حالت کے بارے میں امریکی میڈیا کی رپورٹ پر غور کر رہے ہیں۔ رپورٹس کے مطابق جنوبی کوریا کی یونیفکیشن منسٹری اور قومی انٹلیجنس سروس کے عہدیداروں نے بتایا ہے کہ وہ فوری طور پر اس رپورٹ کی تصدیق نہیں کرسکتے۔ منسٹری کا مزید کہنا ہے کہ وہ ڈیلی این کے کی رپورٹ کی بھی تصدیق کرنے کی حالت میں نہیں ہیں جس میں بتایا گیا ہے کہ سرجری کے بعد صدر کم جانگ ان ٹھیک ہو گئے ہیں اور ان کی حالت بہتر ہو رہی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here